سعودی عرب، متحدہ عرب امارات سمیت خلیجی ریاستوں میں عیدالاضحیٰ مذہبی عقیدت و احترام کے ساتھ منائی جا رہی ہے۔ عیدالاضحیٰ کا سب سے بڑا اجتماع مسجدالحرام میں ہوا جب کہ مسجد نبوی ﷺ میں بھی نماز عید ادا کی گئی۔متحدہ عرب امارات میں نماز عید کا بڑا اجتماع شیخ زاید مسجد ابوظہبی میں ہوا،دبئی، شارجہ اور دیگر ریاستوں میں بھی نماز عید کے اجتماعات منعقد ہوئے۔

 

 

اس کے علاوہ فلسطین، عراق، افغانستان، انڈونیشیا اورتھائی لینڈ میں بھی مسلمان عیدالاضحیٰ منا رہے ہیں، ترکی، کویت کے علاوہ نائیجیریا سمیت کئی افر یقی ممالک میں بھی عیدالاضحی آج مذہبی جوش و خروش کے ساتھ منائی جا رہی ہے، ان ممالک میں نماز عید کے بعد قربانی کی سنت ادا کی گئی۔

 

 

پاکستان سمیت امریکہ اور یورپ کے کئی ممالک میں عید الاضحیٰ پیر 12 اگست کو منائی جائے گی، پاکستان میں عید قرباں کے حوالے سے روایتی جوش و خروش پایا جاتا ہے تاہم شدید بارشوں کی وجہ سے اس سال قربانی کے حوالے سے کچھ مشکلات پیش آسکتی ہیں، جبکہ کراچی سمیت کئی شہروں میں نماز عید کیللئے مخصوص عید گاہ گراونڈز میں پانی بھرا ہوا ہے جس کی وجہ سے کچھ مقامات پر نماز عید کے اجتماعات کیلئے متبادل انتظامات کیئے جائیں گے۔

 

 

پاکستان میں عید الاضحیٰ کو عید قرباں ، بڑی عید ، نمکین عید بھی کہا جاتا ہے کے موقع پر قربانی کے ساتھ خصوصی اہتمام بھی کیئے جاتے ہیں، غرباء و مستحقین اور رشتہ داروں میں گوشت کی تقسیم ایک الگ ہی احساس رکھتی ہے جبکہ نمکین عید کی مناسبت سے قربانی کے گوشت کے خسوصی پکوان تیار کیئے جاتے ہیں۔

 

 

عید قرباں کے موقع پر کروڑوں پاکستان قربانی کرتے ہیں ایسے میں جانور ذبح کرنے کیلئے پیشہ ور قصائیوں کی کمی پیدا ہوجاتی ہے جسے پورا کرنے کیلئے موسمی قصائی میدان میں آجاتے ہیں جن میں سے کچھ کو جانور ذبح کرنے اور گوشت بنانے کا تجربہ ہوتا ہے تو کچھ جانور کے گوشت کو برباد کردیتے ہیں۔ ایسے موسمی قصائی جانور ذبح کرتے وقت انھیں اذیت دیتے ہیں جو شرعی طور پر جائز نہیں اس لیئے اس میں خاص احتیاط کی ضرورت ہے۔

 

 

کراچی میں سپرہائی وے پر لگنے والی ایشیا کی سب سے بڑی منڈی اس برس 31 جولائی اور 11 اگست کی شدید بارشوں کی وجہ سے شدید متاثر ہوئی، بیوپاریوں کو اپنے جانور سنبھالنا مشکل ہوا تو خریداروں نے بھی منڈی کا کم ہی رخ کیا جس کی وجہ سے گذشتہ سال کے مقابلے میں گائے اور بکروں کی قیمتوں میں نمایاں کمی نظر آئی ہے۔

 

 

طبی ماہرین نے بارشوں اور مویشیوں کے باعث عوام کیلئے کچح احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا مشورہ کیا ہے، مویشیوں میں کانگو وائرس کے خدشے کی بناء پر تاکید کی گئی ہے کہ جانوروں کی خریداری کے وقت ہاتھوں پر دستانے اور پوری آستین کے کپڑے پہن کر منڈی جائیں، خریدے گئے جانور کی صفائی کا خاص خیال رکھیں اور قربانی کے بعد گوشت کا استعمال توازن کے ساتھ کریں تاکہ موسم کی سکتی کے اثرات سے متاثرہ معدہ گوشت کو ہضم کرنے میں اپنا کام کرسکے۔

 

 

 

 

0 replies

Leave a Reply

Want to join the discussion?
Feel free to contribute!

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے