محکمہ موسمیا ت نےکراچی میں بارش کے تیسرے اسپیل کی پیشگوئی کردی ہے، ،چیف میٹرولوجسٹ نےاس حوالےسے بتایا کہ راجستھان کی جانب سےنیاسسٹم کراچی کی جانب بڑھ رہاہے،سسٹم کےباعث کراچی میں15اگست کی دوپہرسےبارش کا امکان ہے، چیف میٹرولوجسٹ کے مطابق ماڈریٹ بارشوں کا نیا سسٹم زیریں سندھ کو متاثر کرے گا اور 16 اگست تک بارش کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری رہے گا۔

 

اس سے قبل چیف میٹ کا کہنا تھا کہ بارش کا سسٹم جنوب مغرب سے سمندر میں داخل ہوگیا، کراچی میں اب تیز بارشوں کا امکان نہیں ، عید کے تین دن موسم ابرالود رہے گا، ہلکی بوندا باندی ہوسکتی ہے، لیکن بارش کے اس نئے سسٹم نے اہالیان کراچی کیلئے ایک اور امتحان کی نوید سنادی ہے۔

شہر کراچی کے باسی بارشوں کو ترستے رہے ہیں، اور ان کی یہ خواہش ماحولیاتی تبدیلیوں نے پوری بھی کردی ہے لیکن کسے معلوم تھا کہ باران رحمت کو زحمت و اذیت میں بدلنے کیلئے سندھ کی حکومت، کے الیکٹرک اور بلدیاتی ادارے تیار بیٹحے ہیں شہر مین 31 جولائی اور پھر 9 سے 11 اگست تک ہونے والی تباہ کن بارشوں نے پورا شہر جل تھل کررکھاہے، کراچی کا نظام درہم برہم ہے، اکثرعلاقوں کی سڑکیں اور گلیاں تاحال  تالاب کا منظر پیش کررہی ہیں۔

دوہفتے کے دوران کےالیکٹرک کی نااہلی اورغفلت نے 33 افراد کو موت کی نیند سلا چکی ہے تاہم ابھی تک ادارے کےخلاف کوئی کارروائی نہیں کی گئی، میئرکراچی نے کےالیکٹرک کےخلاف بڑی تگ و دو کے بعد مقدمہ بھی درج کرایا ہے لیکن ایسا لگتا نہیں کہ کےالیکٹرک جیسےعفریت کا اس مقدمےسےکچھ بگڑ سکتا ہےدوسری جانب شہر میں نالوں کی صفائی اور نکاسی آب کا مسئلہ منہ پھاڑے کھڑا ہے اورحکام کی جانب سے بیانات والزامات کےسوا کوئی عملی اقدام نظرنہیں آتا،ایسے میں بارش کے تیسرے اسپیل کی پیشگوئی شہریوں کیلئے مزید پریشانی کا باعث بن سکتی ہے۔

 

0 replies

Leave a Reply

Want to join the discussion?
Feel free to contribute!

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے