قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے کہا ہےکہ گجرات کےقاتل نریندرمودی نے کشمیر پر ظلم و ستم ڈھائے، مودی نے370 اور 35 اے ختم کرکےکشمیر پرقبضہ کرنےکی کوشش کی۔ لیکن مودی یاد رکھیں کہ ہم کبھی ایسا ہونے نہین دیں گے اور اس کا ہاتھ توڑنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

 

انھوں نے کہا کہ 65 کی جنگ میں پوری قوم فوج بن گئی اوردشمن کو منہ توڑجواب دیا، حال ہی میں بھارت نے پھرحملہ کرنے کی گندی کوشش کی، انھوں نے مودی کو للکار کر کہا، وہ دن دور نہیں مودی، جب ہم تم سے ایک ایک دن کا حساب لیں گے۔

 

شہباز شریف نے کہا کہ کشمیر کی وادی خون سے سرخ ہو چکی ہے اور کتنی قربانی مانگتے ہو، آج ہمیں ٹرمپ کی طرف نہیں دیکھنا اللہ کی طرف دیکھنا ہے، اللہ کی مدد آئے گی اور ضرور آئے گی، شرط یہ ہے کہ ہمیں کشمیریوں کے ساتھ کھڑے رہنا ہوگا۔

 

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ کشمیر کو آزادی دلانی ہے تو ٹرمپ نہیں اللہ کی مدد چاہیے، ہمیں ٹرمپ سے پیسے اور سہارا نہیں چاہیے، ہمیں خود پر بھروسا کرنا ہوگا، شہباز شریف نے کہا کہ 72 سال گزر گئے لاکھوں شہیدوں کا حساب کتاب نہیں ہوا، وہ لاکھوں شہید پوچھیں گے کہ اس عظیم پاکستان کے لیے قربانیاں دیں، تم نے کیا کیا اس پاکستان کے ساتھ۔۔۔؟؟

 

اپوزیشن لیڈر نے کہا پاکستان کی تاریخ عظیم کارناموں سے بھری ہوئی ہے، 1998 میں 28 مئی کو ایٹمی دھماکے ہوئے، نواز شریف سے کہا گیا کہ ایٹمی دھماکے نہ کریں، 5 ارب ڈالر کی پیش کش کی گئی، لیکن نواز شریف نے 5 دھماکے کر کے دشمن کے دانت کھٹے کر دیے۔

 

 

 

0 replies

Leave a Reply

Want to join the discussion?
Feel free to contribute!

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے