وفاقی کابینہ نے جمعے کو یوم یکجہتی کشمیر منانے اور پاکستان نوجوان پروگرام کی منظوری دے دی، پاکستان نوجوان پروگرام کے تحت نوجوانوں کو 100 ارب روپے میں سے آسان قرضے فراہم کیئے جائیں گے، اجلاس میں وزیراعظم کے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب میں کشمیر کا مقدمہ لڑنے کے آپشنز پرغور کیا گیا۔

وفاقی کابینہ کے اجلاس میں 10 نکاتی ایجنڈے پرغور کیا گیا۔ وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے اجلاس کے بعد میڈیا بریفنگ میں بتایا کہ وزیراعظم کشمیریوں کی آواز بن گئے ہیں، کشمیر کے حق کیلئے پوری قوم کا سڑکوں پر نکلنا دنیا کو ڈو مور کا پیغام ہے۔

انہوں نے کہا کہ جمعے کو 12 سے12:30 تک پوری قوم کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کرے گی، وزیراعظم نے کہا ہے کہ دنیا میں کوئی ہمارے ساتھ آئے یا نہ آئے ہم کشمیریوں کا ساتھ دیں گے۔

فردوس عاشق اعوان نے کابینہ فیصلوں سے متعلق بتایا کہ وزیراعظم نے خواجہ سراؤں کے بنیادی حقوق کے تحفظ، چائلڈ پورنوگرافی میں ملوث افراد کیخلاف سخت کارروائی اور قانون سازی کی ہدایات دیں۔

فردوس عاشق اعوان نے بتایا کہ کابینہ کو اداروں کی نجکاری کے بارے میں آگاہ کیا گیا، ندیم افضل چن کہیں نہیں جارہے وہ اب بھی وزیراعظم کے ترجمان ہیں،وزیراعظم نے دو ٹوک اعلان کردیا ہے کہ دنیا میں کوئی کشمیر کے ساتھ ہو یا نہ ہو پاکستان ضرورکھڑا ہوگا،کابینہ اجلاس میں گیس اور بجلی کے بلزجمع کرانے کی مدت بڑھاکر 15 دن کرنے کا فیصلہ کیا گیا جبکہ بیرون ملک سے ترسیلات زر پرفیس ختم کردی گئی ہےکابینہ نےاسلام آباد میں منشیات کےعادی افراد کی بحالی کیلئے سینٹر کےقیام کی منظوری دی ہے۔ کامیاب جوان پروگرام کا نام پرائم منسٹر کامیاب جوان یوتھ انٹرن شپ پروگرام کردیا گیا ہے، درخواست فیس 100 روپے جبکہ درخواست کو 30 دن کے اندر نمٹانے کی ہدایت کی گئی۔

اجلاس میں وزیر ریلوے نے بتایا کہ 38 ٹرینیں چلائی گئی ہیں اور 37 لاکھ لیٹر تیل بچایا،کابینہ نے بسوں میں معذور افراد کی نشستیں مختص کرنا لازمی قراردیا جبکہ غریب قیدیوں کے جرمانے کی رقم ادا کرنے کے لائحہ عمل کی منظوری دی گئی،وفاقی کابینہ نے عامرممتاز کو پاکستان اسٹیل ملز کا چیئرمین مقرر کرنے ، چار کمیونٹی ویلفیئراتاشیوں کی تعیناتی اور ہیلتھ ریگولیٹری اتھارٹی کے 9 ارکان کی نامزدگی کی منظوری دی گئی،فردوس عاشق اعوان نے بتایا کہ پشاورمیں کافی عرصے سے بند سکھوں کا گوردوارہ کھولنے کا فیصلہ بھی کیا گیا ہے۔

 

0 replies

Leave a Reply

Want to join the discussion?
Feel free to contribute!

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے