لاہور ميں مطالبات کی منظوری کیلئے احتجاج کرنیوالے نابينا افراد کو پنجاب پولیس نے دھر لیا۔

ذرائع کے مطابق لاری اڈہ سے پنجاب اسمبلی تک مارچ کرنے والے نابینا افراد کو پنجاب پولیس نے پناہ گاہ میں بند کرديا گيا، پناہ گاہ کے گيٹ کے سامنے پوليس کی بھاری نفری بھی تعينات کردی گئی۔ احتجاج روکنے کیئے پنجاب پوليس نے نابینا افراد کو پکڑا۔ پناہ گاہ ميں مبحوس نابينا افراد نے باہر نکلنے کیلئے گيٹ توڑنے کی کوشش بھی کی۔ مظاہرين کا مطالبہ ہے کہ کنٹريکٹ ملازمين کو مستقل کيا جائے اور بیروزگار ملازمين کو روزگار فراہم کيا جائے۔

مظاہرين نے مطالبات کی منظوری کیلئے لاری اڈا سے پنجاب اسمبلی تک احتجاجی مارچ کرنا تھا، تاہم پولیس کی جانب سے انہیں اسمبلی کی جانب جانے سےروک دیا گیا۔

0 replies

Leave a Reply

Want to join the discussion?
Feel free to contribute!

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے