سپریم کورٹ نے سانحہ آرمی پبلک اسکول (اے پی ایس) ازخود نوٹس کیس میں انکوائری کمیشن کی رپورٹ پر اٹارنی جنرل کو حکومت سے ہدایت لینے کا حکم دے دیا۔

 چیف جسٹس پاکستان گلزار احمد نے ساتھ ہی ریمارکس دیے کہ سانحہ اے پی ایس کے ذمہ داران کو نہیں چھوڑیں گے۔

عدالت عظمیٰ میں چیف جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں جسٹس اعجاز الاحسن پر مشتمل 2 رکنی بینچ نے سانحہ اے پی ایس ازخود نوٹس کیس کی سماعت کی۔

دوران سماعت اے پی ایس کے شہید بچوں کے والدین کی بڑی تعداد عدالت میں پیش ہوئی جبکہ انکوائری کمیشن کی 6 جلدوں پر مشتمل رپورٹ بھی عدالت میں پیش کی گئی۔

اس موقع پر والدین کی جانب سے انصاف کی اپیل کرتے ہوئے کہا گیا کہ پہلے دن سے ہی انصاف مانگ رہے ہیں لیکن ابھی تک انصاف نہیں ملا، جس پر چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ ہمیں والدین سے بے حد ہمدردی ہے، اب کیس سپریم کورٹ کے پاس ہے، والدین کو ضرور انصاف ملے گا۔

منبع: ڈان نیوز

0 replies

Leave a Reply

Want to join the discussion?
Feel free to contribute!

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے