افغان طالبان کے ترجمان نے کہا ہے کہ امریکی سیکریٹری اسٹیٹ اور طالبان کے درمیان افغان امن عمل کے حوالے سے تبادلہ خیال ہوا۔

خبرایجنسی رائٹرز کے مطابق طالبان کے ترجمان سہیل شاہین کا کہنا تھا کہ ‘پومپیو نے طالبان کی مذاکراتی ٹیم کے سربراہ ملا برادر اخوند سے ویڈیو ملاقات کی’۔

ان کا کہنا تھا کہ ملاقات میں ‘افغان امن عمل پر بات چیت کی گئی’۔

ٹوئٹر پر اپنے بیان میں طالبان ترجمان نے کہا کہ ‘پومپیو اورملابرادر نے افغان حکومت کی جانب سے طالبان کے قیدیوں کی رہائی پر بھی بات ہوئی ہے جو ان کا مطالبہ ہے’۔

خیال رہے کہ افغان طالبان نے 29 جولائی کو اعلان کیا تھا کہعید الاضحیٰ کے موقع پر 3 دن کے لیے جنگ بندی ہوگی، جس کے جواب میں افغان حکومت نے بھی جنگ بندی کا اعلان کردیا تھا۔

افغان طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے ٹوئٹر پر مذکورہ پیش رفت سے متعلق آگاہ کیا تھا۔

انہوں نے کہا تھا کہ ‘عید الاضحیٰ کے مذہبی تہوار کے موقع پر طالبان کی جانب سے کارروائیاں نہیں کی جائیں گی’۔

ترجمان افغان طالبان نے واضح کیا تھا کہ جنگ بندی کا آغاز جمعے کے روز سے شروع ہوگا جو 3 روز تک نافذ العمل ہوگا۔

اپنے پیغام میں انہوں نے جنگجوؤں کو ہدایت کی تھی کہ وہ عید کے تین دن اور تین راتوں کے دوران ‘دشمن’ کے خلاف کارروائیوں سے گریز کریں۔

ترجمان طالبان نے خبردار کیا تھا کہ ‘اگراس دوران دشمن نے حملہ کیا تو جوابی کارروائی کی جائے گی’۔

منبع: ڈان نیوز

0 replies

Leave a Reply

Want to join the discussion?
Feel free to contribute!

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے